Tehreek-i-Insaf Chairman Imran Khan - DawnNews screen grab

جلسوں سے کوئی فرق نہیں پڑے گا، عمران خان

پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ وزیراعظم نواز شریف پاناما لیکس کے معاملے پر قوم کو جواب دینے کے بجائے جلسے کررہے ہیں تاہم اس سے کوئی فرق نہیں پڑے گا۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ وزیراعظم نے چوتھی مرتبہ مانسہرہ میں گیس پائپ لائن کا اعلان کیا ہے۔

‘میاں صاحب آپ جتنی مرضی جلسے کرلیں، قوم آپ سے سوال پوچھے گی، آپ کی بیٹی کہہ رہی ہے ہماری باہر کوئی پراپرٹی نہیں، بیٹا کہہ رہا ہے یہ پراپرٹیز ہماری ہیں، ایک اور بیٹا کہہ رہا ہے ہم کرائے پر رہ رہے ہیں اور آپ کی اہلیہ بیگم کلثوم نواز جو سچ بولتی ہیں وہ کہہ رہی ہیں کہ یہ پراپرٹیز ہماری ہیں، ہم نے سن 2000 میں خرید لی تھیں۔’

عمران خان نے کہا کہ اس معاملے پر وہ تمام سیاسی جماعتوں کا اکٹھا کریں گے، حزب اختلاف کی جماعتیں فیصلہ کر بیٹھی ہیں کہ احتساب کا عمل وزیراعظم سے شروع ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ جہانگیر ترین یا عمران خان سے پہلے نواز شریف کا احتساب ہوگا۔

واضح رہےکہ حالیہ دنوں میں جہانگیر ترین پر قرض معاف کروانے کے الزامات سامنے آئے تھے۔

پی ٹی آئی چیئرمین نے کہا کہ پاناما کے معاملے پر وزیراعظم کو تحقیقات کےلئے مجبور کردیا ہے، ہم پہلی بار طاقتور کا احتساب کریں گے۔

انہوں نے امید کا اظہار کیا کہ رائیونڈ پہنچنے سے پہلے وزیراعظم قوم سے سچ بول دیں گے۔

اس موقع پر انہوں نے لاہور میں یکم مئی کو جلسے کا بھی اعلان کیا۔

ڈان نیوز کے مطابق تناول گیس منصوبے کا اسحاق ڈار 1997 میں بھی افتتاح کرچکے۔

خیال رہے کہ وزیراعظم نے آج مانسہرہ میں جلسے سے خطاب میں عمران خان کے ‘نئے پاکستان’ کے نعرے پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ خیبرپختونخوا میں ان کی حکومت نہیں لیکن اس کے باوجود یہاں کے ترقیاتی منصوبوں کا بیڑہ مسلم لیگ (ن) نے اٹھارکھا ہے۔

اس کے علاوہ دو روز قبل نواز شریف نے ضلع راولپنڈی کی تحصیل کوٹلی ستیاں میں خطاب کرتےہوئے کہا تھا کہ وہ ملک میں دھرنوں کی نہیں بلکہ ترقی کی سیاست کرتے ہیں۔

عمران خان حالیہ دنوں میں پاناما لیکس میں شریف خاندان کی مبینہ کرپشن پر متعدد مرتبہ رائے ونڈ میں دھرنا دینے کی دھمکی دے چکے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*