8

فتنہ پرور زمانے میں دنیاوی تعلیم کے ساتھ دینی تعلیم و تربیت

مانسہرہ ۔ فتنہ پرور زمانے میں دنیاوی تعلیم کے ساتھ دینی تعلیم و تربیت ہمارے اسلاف کا خاصہ ہے مانسہرہ کے پرائیویٹ سکولز کی تاریخ میں پہلی دفعہ حفاظ کرام سٹوڈنٹس کے اعزاز میں پروقار تقریب کا انعقاد باعث عزت و قابل تحسین اورقابل تقلید عمل ہے۔

تقریب تکمیل حفظ القرآن سے مقررین کا خطاب گزشتہ روز مقامی نجی دارارقم سکول میں 18خوش نصیب طلبہ و طالبات قرآن پاک حفظ کرنے والے حفاظ کرام کی دستار بندی و چادر پوشی تقریب منعقدہوٸی جس میں حفاظ کرام سٹوڈنٹس کے والدین عزیز و اقارب اور شعبہ تعلیم سے وابستہ افراد کے علاوہ ہر مکتبہ فکر کے افراد نے کثیر تعداد میں شرکت کی ۔

اس موقع پر دارارقم سکول کے طلبہ و طالبات نے رنگارنگ اسلامی ٹیبلوز پیش کٸے اس موقع پر قرآن پاک تکمیل حفظ کرنے والے خوش نصب حفاظ کرام سٹوڈنٹس میں میڈلز شیڈلز و دیگر نقد انعامات سے نوازا گیااس موقع پر پروقار روحانی تکمیل حفظ القرآن تقریب سے خطاب کرتے ہوۓ استاد امام کعبہ الشیخ قارالمقری عبدالعلیم صابر ڈائریکٹر ہزارہ ریجن دارارقم سکولز قاضی محمد ہارون ضلعی امیر جماعت اسلامی

ڈاکٹرسید طارق شیرازی میاں محمد نعمان بالاکوٹ قاری حافظ مختیار انعام خان سلیم قریشی ملک احتشام محمد شاکرجماعت اسلامی و دیگر مقررین نے کہا کہ دار ارقم سکولز نے حقیقی معنوں میں دنیاوی تعلیم کے ساتھ دینی تعلیم و تربیت دے کر حق ادا کر دیا ہے جس پر سکول انتظامیہ کو خراج تحسین کی مستحق ہے انہوں نے کہا کہ بچوں کی اسلامی ذہن سازی کی جائے تو دنیا و آخرت سنور جائے گی۔

حافظ قرآن بچے خاندان کے لئے صدقہ جاریہ ہیں مقررین نے کہا کہ آجکل کے پرفتن دور میں دنیاوی علوم کے ساتھ دینی تعلیم و تربیت دنیا و آخرت سنوارنے کا بہترین موقع ہے دارارقم سکولز کی 27برانچوں میں سینکڑوں طلبہ و طالبات تکمیل حفظ القرآن کر چکے ہیں اور ایک ہزار سے زائد سٹوڈنٹس حفظ قرآن مجید جاری رکھے ہوئے ہیں۔

مقررین نے پروقار تکیمل حفظ القرآن تقریب انعقاد پر سکول انتظامیہ کو زبردست خراج تحسین پیش کیا جبکہ آخر میں استاد امام کعبہ الشیخ قارالمقری عبدالحلیم صابر نے اسلام و پاکستان کی سلامتی امت مسلمہ کے اتحاد ویکجہتی اور سیکورٹی فورس وافواج پاکستان کی حفاظت کے لٸے اجتماعی دعا کراٸی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں