19

ریسکیو 1122 ہمت جزبہ اور فعض شناسی

ایبٹ آباد۔ ہمت جزبہ اور فرض شناسی کو جب اپنا شعار بنا لیا جائے تو پھر ہر طرح کی مشکل اور کٹھن وقت کا مقابلہ بہادر جرات سے کیا جا سکتا ہے ایسی ہی مثال ریسیکیو 1122 ایبٹ کے اعلی افسران اور عملہ کی ہے صرف ایک فون کال پہ مایہ ناز اور تجربہ کار عملہ بنا وقت ضائع کیے آپ کے دروازے پر۔

کچھ روز قبل ایسا ہی ایک واقعہ ایبٹ آباد شہر کے علاقہ سپلائی میں پیش آیا جب ایک ماں بچے کو جنم دینے کے درد اور کرب میں مبتلا تھی اور ریسکیو 1122 کو مدد اور فوری ہسپتال پہچانے کے لیے فون کال کی گئی ریسکو 1122 کے اسٹیشن سے ایمبولینس بمعہ تجربہ کال فی میل سٹاف روانہ کی گئ جن میں سنئیر میڈیکل ٹیکنشن امتیاز شاہیں صاحبہ تھی جنہوں نے انتہائی مہارت اور پیشہ وارانہ صلاحیتوں کا استعمال کرتے ہوئے بچے کی بخیر و خوبی پیدائش کروا دی جس سے متعلقہ خاندان نہ صرف خوش ہوا بلکہ ڈھیروں دعاوں سے بھی نوازا .

ایک اورافسوس ناک واقعہ ایبٹ آباد کے علاقہ شیخ البانڈی میں پیش آیا جب ایک ہی خاندان کی خواتین اور شیر خوار بچے کمرے میں گیس بھر جانے کی وجہ سے بے ہوش ہو گئے اور جب مدد کے لیے ریسکیو 1122 فون کال کی گئی تو ایمبولینس بمعہ تجربہ کار سٹاف موقع پہ پہنچ گیا ریسکیو 1122 کی سنئیر میڈیکل ٹیکنشن امتیاز شاہینہ صاحبہ نے صرف متاثرین کو ریسکیو کیا بلکہ پیشہ وارنہ اور انتہائی مہارت سے شیر خوار بچے کو آکسیجن پہنچائی جسکی ویڈیو سوشل میڈیا پہ بھی وائرل ہوئیں.

اس پورے خاندان کو بروقت ریسکیو سے بچا لیا گیا جس پہ اہلیاں ایبٹ آباد نے ریسکیو ٹیم کا شکریہ بھی ادا کیا ضلعی ایمرجنسی آفیسر ریسکیو 1122 عارف خٹک صاحب نے ان خدمات کے صلہ میں سنئیر میڈیکل ٹیکنیشن امتیاز شاہیں صاحبہ کو اپنے دفتر بلا کے تعریفی سند سے بھی نوازا ..جبکہ اعلی افسران کا اپنے ماتحت عملہ کے ساتھ ایسا شفیق رویہ ہو گا تو عملہ بھی انتہائی ایمانداری سے اپنے فرائض سرانجام دیے گا..
ریسیکو 1122 ایبٹ آباد تحفظ کا احساس

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں